Browsing Category

کالم

دینی مدارس جہالت کی فیکٹریاں؟

ماضی قریب میں آپ نے ایک جملہ سنا ہوگا کہ '' دینی مدارس جہالت کی فیکٹریاں''ہیں۔مئی 2015 کودینی مدارس کو مرکزی دھارے میں شامل کرنے کے حوالے سے وزارت مذہبی امور میں ایک اہم اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس میں پانچ معروف وفاق المدارس یعنی اتحاد تنظیمات…

آئینِ جہاں بدل رہا ہے

قانونِ فطرت کے مطابق ہر شب کا اختتام سحر پر ہونا یقینی ہے۔ رات کی تیرگی کا حد سے بڑھ جانا اور ستاروں کی تنک تابی اس بات کی دلیل ہے کہ صبح روشن کی آمد آمد ہے۔  یوں بھی ہوتا ہے کہ شب تاریک کے بعد جب    مستطیل پھیلتی ہوئی صبح  کے آثار دکھائی…

مائنس ون کی صورت میں موزوں ترین امیدوار

جب سے مائنس ون کا "شوشہ" سامنے آیا ہے ۔ ہمارے سیاسی حلقوں میں یہ بحث چھڑ گئی ہے کہ ایسی صورت میں متوقع وزیر اعظم کون ہوگا؟ اپوزیشن کی جماعتیں تو کہہ رہی ہیں کہ مائنس ون کے پلوں تلے سے بہت سا پانی بہہ چکا ہے اب اس کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔…

صدیق عالم، ایک علاحدہ رنگِ سخن کا موجد

"اسے جھکنے نہ دو؛ اور نہ ہی اس کی شدت کم کرو۔ اسے منطقی بنانے کی کوشش بھی نہ کرو؛ رواج کے مطابق اپنی روح کو مدون کرنے کی بجائے بے رحمی سے اپنے انتہائی شدید جنون کی پیروی کرو۔" صدیق عالم کے افسانوں کا انتخاب " نادر سکوں کا بکس" مطبوعہ " آج"…

دینی مدارس خود کفیل کیسے ہوں؟

پاکستان میں جہاں دیگرعصری تعلیمی ادارے موجود ہیں،  وہاں دینی مدارس جیسے تعلیمی ادارے بھی ایک  حقیقت ہیں۔پاکستان میں اس وقت ہزاروں  دینی مدارس  میں کم و بیش پانچ تا چھ لاکھ طلباء زیر تعلیم ہیں ۔ دینی مدارس  کے بارے میں ہمیشہ سے   ایک طبقہ کی…

رشید مصباح کے لئے

"کبوتر بازی اور غزل بازی میں کیا فرق ہے"؟ جب تین چار شاعر اکٹھے ہو جاتے اور کوئی اپنے نئے شعر سنا رہا ہوتا تو وہ درمیان میں یہ سوال اچھالتا۔ غزل دھری کی دھری رہ جاتی اور بحث شروع ہو جاتی۔ ایک شرارتی مسکراہٹ کے ساتھ اپنے مخصوص انداز چچلی…

“مائنس ون” فارمولے کا پہلا نشانہ: سید منور حسن

منور حسن ہزاروں شہدا کی توہین پر معافی مانگیں، شہدا کے خاندانوں اور انکی قربانیوں کو سیدمنور حسن سے توثیق کی ضرورت نہیں۔“ (آئی ایس پی آر) ”فوج کو سیاسی معاملات میں مداخلت کا حق نہیں، فوج کے جوانوں کو خراج تحسین پیش کرنے والے پالیسی بیان فوج…

کیا پارلیمنٹ واقعی سپریم ہے؟

برطانوی پارلیمنٹ کو دنیا بھر کی پارلیمانوں کی ماں کہا جاتا ہے۔ جمہوری اداروں کا جنم اور ارتقاء اپنے دامن میں کئی نشیب و فراز کا امین ہے۔ اقتدار ِ اعلیٰ کے مغربی تصورات بادشاہت سے نکل کر ان اداروں کی امانت بنے۔ اس سفر میں کبھی بادشاہوں کے سر…

علی اکبر ناطق کا افسانوی مجموعہ “قائم دین” : یو بی ایل ایوارڈ کی ساکھ پر سوالیہ نشان

علی اکبر ناطق کا افسانوی مجموعہ "قائم دین" تقریباً دو سال سے میری لائبریری میں موجود تھا۔ اسے یو بی ایل ایوارڈ اور نقادوں سے سندِ اعتبار ملنا گاہے مجھے اس کے مطالعے پر ابھارتا تھا، لیکن عدالتی مصروفیات اور وقت کی قلت آڑے آتی رہی۔ وبا کے…

افغان طالبان کی طاقت

افغان طالبان کے اس اصرار نے کہ افغانستان میں القاعدہ کا وجود نہیں، دنیا کو حیرت میں ڈال دیا ہے۔ طالبان کے اس بیان سے رواں برس ان کی جانب سے کئے گئے امریکہ  طالبان امن معاہدے میں ان کی جانب سے کئے گئے وعدوں پر کوئی اثر نہیں پڑنے والا جن…