Browsing Category

پرنٹ ایڈیشن

کوئی سچائی خوبصورتی کے بغیر نہیں ہوتی: خدا، قرآن اور حقوقِ نسواں

جدید دنیا میں خواتین کی مساوی حیثیت اور ان کے حقوق کا مسئلہ اگرچہ کافی حد تک تسلیم شدہ ہے، لیکن یہ مکمل طور پہ غیرمتنارعہ کہیں بھی نہیں ہے۔ اگر مسلم دنیا کی بات کی جائے تو یہ مسئلہ بنیادی مفروضات کے حوالے سے بھی کافی اختلافی ہے، عوامی سطح…

جدید قطر کے قیام میں آلِ ثانی کا تاریخی کردار

خلیجی ممالک میں قطر کوایک خاص امتیازی حیثیت حاصل ہے جس کا اعتراف بین الاقوامی سطح پر بھی کیا جاتا ہے۔ لیکن ایک چھوٹا سا ملک باوجود تنازعات و مشکلات کے یہاں تک کیسے پہنچا، یہ ایک منفرد تاریخ ہے جس میں آلِ ثانی کا کردار بہت اہم ہے۔ عاطف ہاشمی…

آزادی کی ڈائمنڈ جُوبلی، پارلیمنٹ کے 75 سال

قیامِ پاکستان کی ڈائمنڈ جُوبلی مناتے وقت جہاں ایک طرف اُمید کے درجنوں چراغ منور ہیں جو پاکستانیت کے ارتقاء کی پرعزم کہانی سناتے ہیں، اچھے مستقبل کی آس جگاتے ہیں، تو دوسری طرف امسال یہ بات کھل کر سامنے آئی ہے کہ دنیا میں آبادی کے اعتبار سے…

پاکستان فلم انڈسٹری 1947ء سے 1964ء تک: نئی شناختوں کی تعمیر

ستر کی دہائی انڈین پنجاب میں شروع ہونے والی سیاسی اتھل پتھل اور پاکستانی سینما میں سکھ کرداروں کی غیر معمولی تصویر کشی کا نقطہ آغاز تھی۔ ستر کی دہائی کے اواخر میں خالصتان تحریک سے منسلک سکھ عسکریت پسند علیحدہ وطن " خالصتان" کے لیے جدوجہد…

خواتین کے حقوق اور جدوجہد کی کہانی

گزشتہ ایک صدی سے عورتوں کے حقوق کے لیے نہایت شدت سے ہر سطح پر آواز اٹھائی جا رہی ہے اور وقت کے ساتھ اس کی شدت اور وسعت دونوں میں اضافہ ہوا ہے۔ عالمی طور پر اس کے لیے آٹھ مارچ کو مخصوص کیا گیا ہے۔ اس دن دنیا بھر میں خواتین کے حقوق سے متعلق…

مصنوعی ذہانت کے عہد میں بنی نوع انسان

ٹیکنالوجی کی ترقی تو اپنی جگہ ہوش رُبا تھی ہی، اب جس میدان میں انسان نے قدم رکھا ہے، ماہرین کو خدشہ ہے کہ کہیں اس کا نتیجہ اس جہان سے انسان کی بے دخلی کی صورت میں نہ نکل آئے۔ مصنوعی ذہانت کے شعبے میں ہونے والی پیش رفت میں جس طرح انسان کی…

ہمارے ادب کا ارتقا اور آج کا تہذیبی بحران

سماجی علوم کے ممتاز سکالر پروفیسر ڈاکٹر سید جعفر احمد، ’انسٹی ٹیوٹ آف ہسٹاریکل اینڈ سوشل ریسرچ‘ کے ڈائریکٹر اور سہیل یونیورسٹی کراچی کے ڈین، فیکلٹی آف سوشل سائنسز ہیں۔ اس سے قبل جامعہ کراچی کے ’پاکستان سٹڈی سنٹر‘ سے وابستہ رہے۔ ادب، تاریخ…

پاکستان کی تعلیمی پالیسیوں میں فکری اور لسانی تنوع کا مسئلہ

رسمی تعلیم بھی پراپیگنڈا کا ایک ذریعہ ہی ہوتی ہے۔ دنیا میں کہیں بھی فری، یعنی بے تعصب تعلیم موجود نہیں۔ ہر ملک میں اس رسمی تعلیم کے اپنے اہداف ہوتے ہیں۔ تاہم دنیا میں ہرجگہ تعلیم میں تعصب کی مقدار مختلف ہوتی ہے اور اسی طرح تعلیم و تدریس کے…

مذہبی معاشرہ اور لبرل ازم

لبرل ازم کی اصطلاح ہمارے ہاں عموماً‌ سماجی آزادیوں کے تناظر میں استعمال ہوتی ہے اور اس سے مراد انفرادی آزادیوں پر ایسی قدغنوں کو رد کرنا لیا جاتا ہے جو سماج، مذہب یا ریاست کی طرف سے عائد کی جائیں۔ اس مفہوم میں مذہبی معاشرے اور لبرل ازم میں…

پاکستان میں سول ملٹری تعلقات: مثالی توازن کی تلاش

ریاست اور حکومت میں طاقت کے سرچشمے اور ان کی باہمی ہم آہنگی اور آویزش سیاسیات، عمرانیات، اور دیگر متعلقہ علوم میں ہمیشہ سے بحث کا موضوع رہی ہے۔ ماہرین نے اس پر تواتر سے لکھا ہے اور کئی ایسے ماڈل پیش کیے گئے ہیں جن میں سول اور عسکری اداروں…