Browsing Category

رپورتاژ

شناخت پر قومی مکالمہ

قیامِ پا کستان کے بعد پاکستان کی یکجہتی اور بقا کے خیال کے پیشِ نظر اہلِ ا قتدار نے پاکستانی سماج کو وطنیت کی بنیادوں پر ایک یکساں قومی شناخت کے تصور سے ہم آہنگ کر نے کی کوشش کی، ان کا خیال تھا کہ اس طرح پاکستان کو مستحکم رکھنا ممکن ہو سکے…

پاکستان میں متنوع شناختیں اور بقائے باہمی

کیا پاکستان میں شناخت کا بحران ہے؟ اگر ہے تو اس کی وجوہات کیا ہیں ؟ مختلف مذہبی ،قومی، لسانی اور تہذیبی پہچانیں ایک دوسرے کو کس زاویے سے دیکھتی ہیں،کیا وہ متصادم ہیں یا بقائے باہمی پر یقین رکھتی ہیں؟عالمگیریت کے عہدمیں پاکستان کی نظریاتی…

’’پاکستان میں مسلکی حرکیات کی تفہیم‘‘

پاک انسٹی ٹیوٹ فار پیس اسٹڈیز گزشتہ کئی سالوں سے پاکستان میں بین المذاہب و بین المسالک ہم آہنگی کے لیے فکری و علمی مکالمے کا اہتمام جاری رکھے ہوئے ہے ۔اسی سلسلے میں دسمبر 2018ئمیں ایک قومی سیمینار کا اہتمام کیا گیا جس کا عنوان ’’پاکستان میں…

سماجی ہم آہنگی ،مذہبی رواداری اور تعلیم

پاک انسٹی ٹیوٹ فار پیس سٹڈیز 2006ء سے معاشرے میں عدم برداشت ، قیام امن، انتہا پسندی کے خاتمے جیسے موضوعات پر مکالمہ جاری رکھے ہوئے ہے ۔اس سال بھی کالج اور یونیورسٹی اساتذہ کے ساتھ ’’سماجی ہم آہنگی مذہبی رواداری اور تعلیم ‘‘کے موضوع پر 28اور…

مکالمہ پاکستان 2019 کا کامیاب انعقاد

پاکستان کے مسائل کے حل کے لیے تمام طبقوں بالخصوص سول ملٹری مکالمے کی اشد ضرورت ہے ،ایک دوسرے کو مورد الزام ٹھہرانے کی بجائے ایک دوسرے پر اعتماد کرتے ہوئے آگے بڑھا جا سکتا ہے۔پاکستان کے مسائل کے حل کے لیے تمام طبقوں بالخصوص سول ملٹری مکالمے…

پاک انسٹی ٹیوٹ فار پیس اسٹدیز کے زیرِ اہتمام ”مکالمہ پاکستان“ کا انعقاد 26جنوری کو ہوگا

اپنی نوعیت کے پہلے قومی سطح کے مکالمے کا انعقاد ہوٹل مارگہ اسلام آباد میں عمل میں لایا جائے گا۔ مکالماتی پروگرام سے مختلف قومی وسیاسی رہنما، صحافی، تجزیہ کار اور سابق سفیر خطاب کریں گے۔ پاک انسٹی ٹیوٹ فار پیس اسٹڈیز اسلام آباد کے زیرِ…

سماجی ہم آہنگی، رواداری اور تعلیم

14 ،15جنوری2019 کوپاک انسٹی ٹیوٹ فار پیس اسٹڈیز کے زیراہتمام لاہور میں وسطی وجنوبی پنجاب کے کالجز اور جامعات کے اساتذہ کے ساتھ دو روزہ "علمی مکالمہ اور مشق"  کے عنوان سے ایک سیمینار کا انعقاد عمل میں لایاگیا۔سیمینار کی تعارفی نشست کا آغاز…

تجارت یا تعلیم

آٹھ فیصد ایک۔۔۔آٹھ فیصد دو۔۔۔ ۔۔وقفہ۔۔۔۔۔ 10 فیصد ایک۔۔۔10 فیصد دو۔۔۔یہ آوازیں سپریم کورٹ کے وسیع و عریض کمرےعدالت نمبر1 میں گونج رہی تھیں جو کشادہ ہونے کے باوجود سائلین، وکلا اور صحافیوں سے  بھرا ہواتھا۔ ملک کی سب سے بڑی عدالت کے مناظر…

ریاست سمیت تمام مذہبی و سماجی طبقات کو مسلکی ہم آہنگی کے فروغ کے لیے کردار ادا کرنا چاہیے

مرتبہ : شفیق منصور، حذیفہ مسعود ۱۶ دسمبر۲۰۱۸ء بروز بدھ پاک انسٹی ٹیوٹ فار پیس ا سٹڈیز کے زیرِ اہتمام ایک روزہ مکالماتی سیمینار بعنوان ”پاکستان میں مسلکی حرکیات کی تفہیم“کا انعقاد عمل میں لایا گیاجس میں مختلف طبقہ ہائے فکر کی نمائندہ…