سیاسی جماعتوں کی ضم شدہ اضلاع کی صورتحال کا جائزہ لینے کےلئے بیٹھک

قبائلی علاقوں کو خیبر پختونخوا میں ضم کرتے وقت حکومت نے وہاں کے رہائشیوں سے وعدہ کیا تھا کہ ان علاقوں میں اگلے دس سال میں ایک ہزار ارب روپے لگائے جائیں گے ۔ ہر سال 100 ارب روپے ان علاقوں میں انفراسٹرکچر، تعلیمی اداروں اور صحت کے سہولیات…

قبائلیوں کے ساتھ اجنبیوں جیسا سلوک کیوں؟

ضم شدہ قبائلی اضلاع کے عوام نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں بے پناہ جانی ومالی قربانیاں دی ہیں۔ اس بات کا اعتراف وزیراعظم اور آرمی چیف سمیت ملک کے تمام صاحب اختیار حلقے بھی کرتے ہیں لیکن کیا وجہ ہے کہ ملک میں قیام امن کے لیے قربانیاں دینے کے…

وزیراعظم کا طورخم بارڈر کھولنے کا فیصلہ، ایک شاندار اقدام

وزیراعظم عمران خان نے باقاعدہ طور پر پاکستان اور افغانستان کے درمیان مصروف ترین تاریخی سرحدی گزرگاہ طورخم کو دوطرفہ تجارت اور آمد روفت کیلئے  کھول دیا ہے۔ افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے اس دن کو تاریخی قرار دیا اور…

بی آر ٹی منصوبے کی لاگت میں مزید اضافے کا خدشہ

بس ریپڈ ٹرانزٹ (بی آرٹی) عام انتخابات 2013 کے بعد پاکستان تحریک انصاف صوبائی حکومت کا پشاور میں سب سے بڑا منصوبہ تھا جس کو اُس وقت کے وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک نے 2018 کے انتخابات کو سامنے رکھ کر شروع کیا تھا تاکہ اسی کو بنیاد…

خواتین کے حقوق، سیاسی جماعتیں اور جمہوریت پر ڈاکہ

پاکستان کو مسلمان ممالک میں پہلی خاتون وزیراعظم منتخب کرنے کا اعزاز حاصل ہے۔ اسی طرح صوبائی اور قومی اسمبلیوں کی خواتین ممبران سپیکر، ڈپٹی سپیکر اور قومی و صوبائی و زراء کے عہدوں پر تعینات رہی ہیں اور اب بھی ہیں، لیکن اس کے باوجود ملک کے…

قبائلی اضلاع میں برائے نام انتخابات

خیبر پختونخوا میں ضم ہونے والے قبائلی اضلاع میں  صوبائی اسمبلی کی نشستوں پر پہلی دفعہ ہونے والے انتخابات میں صرف دو ہفتے باقی ہیں، اس کے باوجود تاحال الیکشن جیسا ماحول نہیں بن سکا ہے۔ نہ صرف اپوزیشن جماعتوں کے بلکہ حکمران جماعت کے امیدوار…

قبائلی اضلاع کے انتخابات: تحریک انصاف کا مقابلہ اپنے ناراض امیدواروں سے ہے

خیبر پختونخوا کے قبائلی اضلاع میں صوبائی اسمبلی کے انتخابات میں چند روز باقی ہیں۔ موجودہ سیاسی صورتحال کے مطابق آئندہ انتخابات میں پاکستان تحریک انصاف کی پوزیشن باقی سیاسی جماعتوں کی نسبت مضبوط دکھائی دے رہی ہے، تاہم تحریک انصاف کی مقامی…

خواجہ سرا کمیونٹی نئے مالی سال میں مکمل طور پر نظر انداز

چند روز قبل خیبرپختونخوا کے ضلع مردان میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے دو خواجہ سراؤں کو زخمی کردیا۔ زخمی ہونے والے ایک خواجہ سرا کو ٹانگ اور پیٹ میں چار گولیاں لگیں جبکہ سپوگمئی نامی خواجہ سرا بھی فائرنگ میں شدید زخمی ہوئے۔ زخمیوں کو طبی…

انسدادِ پولیو مہم کے خلاف پروپیگنڈا

خیبر پختونخوا حکومت نے صوبے میں انسداد پولیو مہم ناکام بنانے کے لیے پراپیگنڈا مہم چلانے والے سکولوں کے خلاف کاروائی کرتے ہوئے گزشتہ روز 10 اداروں کو بند کر دیا ہے۔ پرائیویٹ سکولز ریگولیٹری اتھارٹی نے کمشنر پشاور کی سربراہی میں بننے والی…

ڈاکٹروں کی ہڑتالیں اور حکومتی عملداری کا فقدان

وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان سے کامیاب مذاکرات کے بعد پشاور سمیت صوبے کے دیگر سرکاری ہسپتالوں میں مامور ڈاکٹروں نے آٹھ روز سے جاری احتجاج ختم کرکے جمعرات کے روز سے دوبارہ کام کرنا شروع کردیا ہے۔ مذاکرات میں حکومت نے دو کمیٹیاں بھی …